حکومت کا 720 روپے دیہاڑی پر اساتذہ بھرتی کرنے کا فیصلہ، شیڈول جاری

    July 5, 2021 10:36 am PST
taleemizavia single page

تعلیمی زاویہ رپورٹ: پنجاب حکومت نے صوبے کے سرکاری سکولوں میں اساتذہ کی خالی اسامیوں پر عارضی تقرریوں کے لیے دیہاڑیوں پر اساتذہ بھرتی کرنےکا فیصلہ کیا ہے، اس ضمن میں پالیسی اور بھرتیوں کا شیڈول بھی جاری کر دیا گیا ہے۔

تعلیمی زاویہ کے پاس دستیاب پالیسی دستاویز کے مطابق حکومت پنجاب چھ فیز میں سرکاری سکولوں کے لیے دیہاڑیوں پر اساتذہ بھرتی کر رہی ہے، ان بھرتیوں کے لیے فیز ون لانچ کر دیا گیا ہے۔

پنجاب حکومت صوبے کے 15 ہزار سرکاری سکولوں کیلئے دیہاڑی پر اساتذہ بھرتی کرے گی ۔ تفصیلات کے مطابق پنجاب کے پرائمری سکول کیلئے 720 روپے دیہاڑی پر استاد بھرتی ہوں گے۔ ایلیمنٹری سکولوں کیلئے 800 روپے دیہاڑی اور سکینڈری سکولوں کیلئے ہزار روپے جبکہ ہائیر سیکنڈری سکولوں کیلئے 1200 روپے دیہاڑی پر اساتذہ بھرتی کیے جائیں گے

پنجاب حکومت نے اساتذہ کی ان بھرتیوں کو سکولز ٹیچرز انٹرن پروگرام کا نام دیا ہے یہ پروگرام کالج ٹیچرز انٹرن سے مشابہت رکھتا ہے۔ محکمہ سکولز ایجوکیشن پنجاب نے فیز ون میں بھرتیوں کیلئے محکمہ سکولز ایجوکیشن نے 15 جولائی آخری تاریخ مقرر کی ہے

فیز ون میں سرکاری سکولوں میں 13 ہزار 736 اساتذہ بھرتی ہوں گے۔ حکومت پنجاب نے دیہاڑی پر اساتذہ بھرتی کرنے کیلئے 13 کروڑ 49 لاکھ روپے کا بجٹ مختص کر دیا

بھرتیوں کیلئے امیدوار آن لائن ٹیچرز ریکروٹمنٹ سسٹم کے تحت اپلائی کرسکتے ہیں۔ پرائمری جماعت کیلئے تعلیمی قابلیت میٹرک، ایلیمنٹری کیلئے انٹرمیڈیٹ تعلیمی قابلیت جبکہ سیکنڈری اینڈ ہائیر سکینڈری کیلئے بی اے اور بی ایس آنرز تعلیمی قابلیت مقرر کی گئی ہے۔

محکمہ سکولز نے مرد اساتذہ کیلئے عمر کی حد 50 برس جبکہ خواتین کیلئے 55 برس عمر کی حد مقرر کی ہے۔ اساتذہ کو دیہاڑی پر کلاسز پڑھانے کا معاوضہ سکول کونسل کے فنڈز سے دیا جائے گا

سکولوں میں اساتذہ کی مذکورہ بھرتیوں کیلئے اہل امیدواروں کے انٹرویوز 20 جولائی کو ہوں گے۔ سکول کونسل پانچ اگست کو بھرتی ہونے والے اساتذہ کو لیٹرز جاری کرے گا۔ محکمہ سکولز ایجوکیشن سرکاری سکولوں کیلئے 9 مہینے کے دورانیہ کیلئے اساتذہ بھرتی کرے گا

سکول کونسل اساتذہ کو دیہاڑی کے حساب سے معاوضہ ادا کرنے کے پاپند ہوں گے۔ بھرتیوں کے خواہشمند اُمیدوار محکہ سکولز ایجوکیشن کی ویب سائیٹ پر تفصیلات دیکھ سکتے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *