کروڑوں کے کاروبار جو ٹکوں میں بکے

    June 17, 2018 10:56 am PST
taleemizavia single page

ویب ڈیسک

برطانیہ میں گھریلو سامان کے سٹوروں کی چین ہوم بیس اس وقت صرف ایک پاؤنڈ میں بک گئی جب اس کے آسٹریلوی مالک ویس فارمرز نے برطانیہ میں ناکامی کے بعد وہاں اپنا تمام کاروبار فروخت کرنے کا فیصلہ کر لیا۔

ویس فارمرز نے صرف دو سال پہلے ہوم بیس 34 کروڑ پاؤنڈ میں خریدی تھی، لیکن کاروبار میں مندی اور دوسرے اخراجات کی وجہ سے اسے ایک ارب پاؤنڈ کا نقصان ہو گیا۔

ایک پاؤنڈ کی رقم شاید بہت سے لوگوں کے لیے حیرت انگیز ہو، لیکن یہ پہلا موقع نہیں ہے کہ کوئی کمپنی ایک پاؤنڈ میں بکی ہو۔ اس کی چند مزید مثالیں پیش ہیں؛

ریڈرز ڈائجسٹ

ریڈرز ڈائجسٹ امریکی رسالہ ہے اور اس کا شمار دنیا کے مقبول ترین رسائل میں ہوتا ہے۔ یہ ڈاکٹروں، دندان سازوں، نائیوں اور دوسری دکانوں میں اکثر رکھا نظر آتا ہے۔

اپریل 2010 میں اس ڈائجسٹ کا برطانوی ایڈیشن بیٹر کیپیٹل نے ایک کروڑ 30 لاکھ پاؤنڈ میں خریدا، لیکن چار سال کے اندر اندر اس نے ہتھیار ڈال دیے۔ کمپنی کو اس قدر خسارہ ہوا کہ اس نے یہ رسالہ مائیک لکویل نامی شخص کو صرف ایک پاؤنڈ میں بیچ دیا۔

بی ایچ ایس

دو ہزار پندرہ میں معروف برطانوی کاروباری شخصیت سر فلپ گرین نے بی ایچ ایس ڈیپارٹمینٹل سٹور چین صرف ایک پاؤنڈ میں فروخت کر دی تھی۔

بی ایچ ایس آرکیڈیا گروپ کا حصہ تھی لیکن کاروبار میں گھاٹے کے باعث سر فلپ کو اسے بیچنے کا فیصلہ کرنا پڑا۔

سِٹی لنک

سٹی لنک کوریئر کمپنی تھی جسے 2013 میں ایک پاؤنڈ میں فروخت کر دیا گیا۔ اسے بیٹر کیپیٹل نے خرید کر اس پر چار کروڑ پاؤنڈ خرچ کیے لیکن وہ اس کی قسمت بدلنے میں ناکام رہے۔

سوانسی اور چیلسی فٹبال کلب

جب 2001 میں انگلش فٹبال کلب کی ٹیم 2001 میں بری طرح ہاری تو اس کے مالک نے اسے ایک پاؤنڈ کی خطیر رقم کے عوض فروخت کر دیا چار سال قبل انھی مالکوں نے یہ کلب دس کروڑ ڈالر میں خریدا تھا۔

یہی تاریخ ایک اور فٹبال کلب چیلسی کی بھی ہے۔ 1982 میں اسے کین بیٹس نے ایک پاؤنڈ میں خریدا تھا، تاہم اس کے ذمے 15 لاکھ پاؤنڈ کے واجب الادا قرض بھی انھی کو ادا کرنا پڑے تھے۔ یہ سرمایہ کاری خاصی منافع بخش ثابت ہوئی۔ کین بیٹس نے بعد میں یہ کلب 14 کروڑ پاؤنڈ میں بیچ دیا۔


Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *